فون پرطلاق دینے کے پانچ دنوں بعد عورت کو گولی مار کر ہلاک کردیاگیا۔

زخمی خاتون کوپولیس اسپتال لے گئی جہاں پر ڈاکٹرس نے اسے مردہ قراردیا۔

لکھنو۔ ایک 30سالہ خاتون کو دبئی نژاد اس کے شوہر نے فون پر پانچ روز قبل طلاق دئے جانے کے بعد گولی مارکر ہلاک کردیاگیا۔پولیس کے مطابق یہ واقعہ منگل کی دوپہر اترپردیش میں ضلع جونپورکے شاہ گنج علاقے میں اس وقت پیش آیا جب متوفی عورت کو ٹمپو میں سوار اپنے گھر جانے والے عرفانہ کے طور پر کی گئی۔

شاہ گنج پولیس کے اسٹیشن ہاوز افیسر جئیپرکاش سنگھ نے کہاکہ واقعہ کے روزموٹر سیکل سوار دونوجوان ائے‘ ملاپور علاقے میں ٹمپو کو روکااور عرفانہ پر گولی چلادی۔مسافرین او ردیگر خوف کے عالم میں بازو کھڑے تھے وہاں حملہ آور موقع سے فرار ہونے میں کامیاب رہے۔

زخمی خاتون کوپولیس اسپتال لے گئی جہاں پر ڈاکٹرس نے اسے مردہ قراردیا۔عرفان کا شوہر محمد منان دبئی میں لیبر کے طور پر کام کرتا ہے۔

کرایہ کے مکان میں رہنے والے عرفانہ اپنے پیچھے دو معصوم لڑکیاں چھوڑ گئی ہے۔سنگھ نے کہاکہ’’ ابتدائی جانچ میں یہ انکشاف ہوا کہ پانچ روز قبل منان نے دبئی سے فون پر اپنی بیوی عرفانہ کو تین طلاق دیدیاتھا۔عرفانہ اپنے شوہر اور دوبچوں کے ساتھ کھیٹا سری میں کرایہ کا مکان لے کر رہ رہی تھی۔

ایک سال قبل منان دوبئی گیاتھا‘‘۔ پولیس نے موقع واردات سے خالی کارتوس برآمد کئے۔متوفی کے بھائی اعظم گڑھ کے ساکن ابوذار نے شاہ گنج پولیس میں شکایت پر منان اور اس کے بڑے بھائی دانش کے علاوہ چھوٹے بھائی مستقیم کے خلاف قتل کے معاملے کے ضمن میں ایک ایف ائی آر درج کی گئی ۔

شاہ گنج علاقے کے سرکل افیسر اجئے کمار سرایواستو نے کہاکہ متوفی کے بھائی نے اپنی شکایت میں کہاکہ ان کی بہن کو مبینہ طور پر حال ہی میں دانش اور مستقیم نے دھمکایاتھا۔ اب تک کوئی گرفتاری عمل میں نہیں ائی ہے

Leave a Comment