دوسری سماج کے لڑکے کے ساتھ گھومنے والی لڑکی کو پنچایت کے احکامات پر درخت سے باندھ کر پیٹا گیا۔

نواڈا۔ جمعہ کے دن سوشیل میڈیا پر ایک وائیرل ہوئے ویڈیو پر مشتمل واقعہ کے مطابق بہار کے نواڈا میں مقامی پنچایت کے احکامات پر گاؤں والوں نے ایک لڑکی کو پیڑ سے باندھ کر پیٹائی کی ہے۔

یہ دل دہلادینے والا ویڈیو جو وائیرل ہوا ہے اس میں لڑکی کے گھر والے بھی پنچایت کے احکامات کی پابجائی او رحمایت کرتے ہوئے دیکھائی دے رہے ہیں کیونکہ لڑکی کسی دوسرے سماج کے لڑکے ساتھ گاؤں سے باہر بھاگ گئی تھی۔

رپورٹس کے مطابق لڑکی 30ستمبر کے روز اپنے بوائی فرینڈ کے ساتھ بھاگنے کے بعد پڑوس کے گاؤں میں وہ ا سوقت تک رہ رہے تھے جب تک دونوں والدین اور گاؤں والے انہیں پکڑ کر گھسیٹتے ہوئے اس کے گاؤں راجولی لے کر نہیں اگئے۔جب لڑکی کو گاؤں واپس لے کر آگئے تو پنچایت بیٹھی اور فیصلہ لیاگیا کہ لڑکی کو ضرور اس کے کام کی سزا دی جانی چاہئے۔

اس ویڈیوصاف طور پر دیکھاجاسکتا ہے کہ لڑکی کو درخت سے باندھ کر ایک شخص پیٹائی کررہا ہے اور گاؤ ں والے تماشائی بن کر سارا نظارہ دیکھ رہے ہیں‘ پیٹائی کے دوران لڑکی متعدد مرتبہ رحم کی گوہار لگارہی ہے مگر مذکورہ شخص کی اس کی پیٹائی کرتا جارہا ہے۔

درایں اثناء لڑکی کی جانب سے دئے گئے بیان کے مطابق وہ بالیاگاؤں کے ساکن اپنے بوائی فرینڈ کے ساتھ اپنی مرضی سے فرار ہوگئی تھی۔ تاہم لڑکی کے والد نے میڈیا سے کہاکہ جو سزا اس کو دے گئی ہے اس کی وہ حقدار تھی۔والد نے کہاکہ’’ ہم لڑکی کی شادی اپنے سماج میں کرنا چاہتے ہیں کسی او رسماج میں ہرگز نہیں‘‘

Leave a Comment