کوہلی کی انگلی زخمی ،پیٹھ کا درد پہلے سے موجود

لندن ۔3 جون (سیاست ڈاٹ کام ) ورلڈ کپ میں ہندوستان کے پہلے میچ سے قبل کپتان ویراٹ کوہلی کے زخمی ہونے سے ٹیم مینجمنٹ کو تشویش ہے۔ کوہلی کو نیٹ سیشن میں بیٹنگ کرتے ہوئے انگوٹھے پر گیند لگی تھی جس پر ان کے ہاتھ میں برف کی ٹکور اور سپرے کیا گیا جبکہ ٹیم فزیو پیٹرک فرہاٹ نے بھی ان کا معائنہ کیا۔یاد رہے کہ حالیہ دنوں میں کپتان ویرا ٹ کوہلی نے انکشاف کیا ہے کہ وہ ایک بہترین بولر بھی رہ چکے ہیں لیکن کمر کی درد کی وجہ سے اب بولنگ نہیں کر سکتے۔ 30سالہ کوہلی ہندوستانی کرکٹ کی تاریخ میں عمر کے لحاظ سے سب سے نوجوان کپتان ہیں جو 50 اوورز کے ورلڈ کپ کھیلیں گے۔ کوہلی نے حال ہی میں انکشاف کیا ہے کہ آخری مرتبہ اْنہوں نے2017 میں سری لنکا کے خلاف ونڈے میں بولنگ کی تھی۔ اْنہوں نے کہا کہ ہم تقریباً میچ جیت چکے تھے، میں نے کپتان ایم ایس دھونی سے پوچھا کہ میں بولنگ کر سکتا ہوں؟ بعد ازاں میں بس بولنگ کروانے کے لیے اپنی بازؤں کو بل دے رہا تھا تو باونڈری کے پاس کھڑے جسپریت بمراہ نے چلاتے ہوئے کہا کہ اس وقت مذاق نہیں، یہ انٹر نیشنل میچ ہے۔ کوہلی نے کہا کہ ٹیم میں کسی کو بھی مجھ پر اعتماد نہیں تھا کہ میں بولنگ کر سکتا ہوں لیکن میں نے بولنگ کی۔ اس کے بعد میری کمر میں شدید درد کے باعث میں نے بولنگ چھوڑ دی اور پھر کبھی نہیں کروائی۔ کپتان نے مزید کہا کہ وہ انگلینڈ کے کھلاڑی جیمز انڈرسن کا بولنگ ایکشن کو استعمال کرتے ہیں۔ کوہلی نے کہا ہے کہ اگرمیری ٹیم میری بولنگ کی صلاحیتوں پر اعتماد کرتی تو میری وکٹیں 8 سے بھی زیادہ ہو سکتی تھیں۔

Leave a Comment