دوکان کے سامنے سے نہ ہٹا تو چاقو ماردیا۔ گویند پوری میں گوشت والے نے نوجوان کی جان لی۔

نئی دہلی۔ ساوتھ ایسٹ دہلی کے گویندرپوری میں ہفتہ کی شام ایک لڑکے نے معمولی بات پر ایک نوجوان کی چاقو گھونپ کر جان لے لی ۔ واردات کے بعد ملز م فرار ہوگیالیکن پولیس نے اتوار کی اولین ساعتوں میں اس کو تغلق آباد سے گرفتار کرلیا۔

اس کی تحویل سے واردات میں استعمال ہوا چاقو بھی برآمد کرلیا۔پولیس کے مطابق گویند پوری کے نوجیون کیمپ میں رہنے والے 21سالہ ترویدی کالونی کی ایک گوشت کی دوکان کے باہر دوستوں کے ساتھ کھڑے ہوکر باتیں کر رہے تھے۔

اسی وقت گوشت کی دوکان کے مالک اٹھارہ سالہ عبدال نے ترویدی اور اس کے دوستوں کو دوکان کے سامنے سے ہٹنے کا کہا۔ اسی بات پر جھگڑا ہوگیا ۔

غصہ میں عبدال نے چاقو نکالا اور ترویدی اور اس کے دسوتوں کو مارنے دوڑا۔ قریب ایک سو میٹر پیچھا کر عبدال نے ترویدی کے سینے میں چاقو مار دیا۔جانکاری ملنے پر گھر والوں نے ترویدی کو مجیدیا اسپتال لے گئے جہاں پر اسے مردہ قراردیدیا گیا۔

ابتداء میں گھر والوں نے پولیس کو جن دوستوں نے ترویدی کو گھر کے باہر بلایاتھا ‘ انہوں نے قتل کیاہے۔ تفتیش میں عبدال کے ملوث ہونے کا سراغ ملا ہے۔

Leave a Comment